اس تحریر پر 4 تبصرے کئے گئے ہیں

  1. وقار غنی

    بہت خوب، اس موضوع سے مجھے تجسس ہو رہا ہے کہ “شروعات” کے جانداروں میں یہ سب کیسے ہوا ہو گا۔ (جس کے بارے میں مجھے کچھ اندازہ نہیں!)۔ اگر ہم ڈارون کا نظریہ ارتقاء کو دیکھیں تو کیا حیوانات سے پہلے یک خلیاتی جانداروں میں بھی یہ فلسفہ پایا جاتا ہوگا؟ آخر یہ سب کب شروع ہوا ہوگا؟

    very nice…..made me curious that how this applies to the starting living organisms (which i don’t know,exactly) if we consider darwin’s theory of evolution before land life(mammals) did plant and other cellular organism has the same philosophy, when did this all started ?

    Reply

    1. شکریہ۔
      اس بارے میں تو مجھے معلوم نہیں کہ یہ سب کب شروع ہوا ہوگا۔۔۔۔ لیکن یک خلیاتی یا کثیر خلیاتی جانداروں میں جنس اس طرح سے نہیں ہوتی جس طرح پیچیدہ جانداروں میں ہے۔ مثلآ میرا خیال ہے کہ بیکٹریا اور وائرس وغیرہ Asexual ہوتے ہیں اور خلیوں کی تقسیم سے افزائش کرتے ہیں۔ جہاں تک نباتات کا تعلق ہے تو ان میں ضرور ایسا کچھ ہوگا۔ قدرت نے وہاں بھی کسی نہ کسی طرح صنفی امتیاز رکھا ہوگا۔ لیکن اس برے میں میں نے بھی کبھی نہیں سوچا۔۔۔۔ کسی دن بیٹھ کے بات کریں گے! :)

      Reply

عمیر ملک کو جواب دیں جواب ترک کریں

بے فکر رہیں، ای میل ظاہر نہیں کیا جائے گا۔ * نشان زدہ جگہیں پُر کرنا لازمی ہے۔ آپکا میری رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں، لیکن رائے کے اظہار کیلئے شائستہ زبان، اعلیٰ کردار اور باوضو ہونا ضروری ہے!۔ p: