اس تحریر پر 9 تبصرے کئے گئے ہیں

  1. وحید

    عمیر، دیباچہ (انٹروڈکشن) تو بہت خوب لکھا، واقعی بہت مزا آیا۔ اشعار میں کافی جگہ رسم الخط (فانٹ) کا مسئلہ ہے شاید۔ حالانکہ میرے پاس پلگ انز اور فانٹس وغیرہ انسٹالڈ ہیں، لیکن آپکے ٹائپ کیے ہوئے تقریبا سب اشعار مکمل ڈسپلے نہیں ہو رہے۔

    Reply
  2. mubasher

    Kya ap ka iqbal se taruf apne angrezi school mai “labpe aati hai” parh k nai tha hoa 😮

    Reply

  3. برادر ۔۔۔۔ درست فرمایا ۔۔۔۔۔ یہ اشعار علامہ صاحب کے ہو ہی نہیں سکتے کیوں زیادہ تر بے وزن اور بحر سے ہی خرج ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔

    Reply

  4. اسلام علیکم

    میں‌آپ سے کلی متفق ہوں، اور بھی بہت سے اشعار جو اقبال سے منسوب ہیں گردش میں‌نظر آتے ہیں ، عوام الناس جسطرح‌ ان اشعار پر داد دیتی دکھائی دیتی ہے پڑھ کر خون کھول اٹھتا ہے۔
    فیسبک اور دیگر سائٹس پر ایسے گروپ موجود ہیں‌جو غلط اشعار کی روک تھام کیلئے مناسب اقدام کر رہیں‌ہیں۔
    وسلام
    محمدعمرفاروق

    Reply

  5. علامہ اقبال کی شعری کی یہ خصوصیت میں نے بهی نوٹ کی ہے کہ یہ اتنی پر معنی ہوتی ہے کہ آپ اس کے استعمال کی وجہہ سے اپنے مصمون کو بامعنی اور پرکشش بنانے میں بہت مدد کرتی ہے ان کا ایک شعر میں اتنی جمع ہوتا ہے کہ مصمون کا مصمون اس میں پنہا محسوس ہوتا ہے .بہت اچهی لگی آپ کی باتیں …خوش رہیں

    Reply

  6. اقبال کے اشعار ہی پہ کیا موقوف۔ فیس بک اور شوشل میڈئے پہ تو فراز کے چھ ایکسٹرا دیوان سے لے کر اولیا اللہ کے من گھڑت قصوں اور حضرت علی کے اقوال سے لے کر احادیث تک بہت کچھ ”اِن“ ہے

    ویسے اقبال کے کافی سارے شعر تو ہوش سنبھالنے سے پہلے ہی یاد کرا دئے گئے تھے مجھے جیسے ”تو شاہین ہے بسیرا کر“ اور ”خودی کو کر بلند اتنا“ ٹائپ

    Reply

  7. اقبال کا مزاج اور آہنگ ہی پہچانا جاتا ہے۔ اور ایسے اشعار، من گھڑت احادیث، واقعات یا اقوال کے متعلق آپ چیختے رہئے کہ بابا یہ غلط ہے، کوئی سنے گا ہی نہیں۔

    Reply
  8. وجاہت باقی

    میرے ایک عزیز جو شاعری کا خوب ذوق رکھتے ہیں اور خود بھی شعر کہتے ہیں، اس بات پر مصر ہیں کہ دوسرے نمبر پر لکھے اشعار اقبال کے ہیں۔۔۔ جبکہ میرا دل نہیں مان رہا۔۔۔ میں 2 دن سے کلیاتِ اقبال کھنگال رہا ہوں کہ شاید کہیں مل جائیں مگر اشعار ندارد۔
    انٹرنیٹ پر ایک جگہ یہی اشعار حافظ‌ سے منسوب نظر آئے، جس سے محض تذبذب بڑھا۔

    Reply
  9. عبدالناصر عطاری

    السلام علیکم و رحمتہ اللہ و برکاتہ
    ہم میں یہ رواج عام پاگیا ہے کہ تحقیق کا دائرہ وسیع کرنے کی بجائے اپنی محدود حقیق پر فیصلہ سنا دیتے ہیں منیب اقبال صاحب علامہ صا حب کے نواسے موجود ہیں فیس بک پر رابطہ فرما کر مزید تحقیق جاری رکهی جا سکتی ہے قبل اس کے فیصلے کو حتمی شکل دے دی جائے
    والسلام عبد الناصر عطاری

    Reply

تبصرہ کیجئے

بے فکر رہیں، ای میل ظاہر نہیں کیا جائے گا۔ * نشان زدہ جگہیں پُر کرنا لازمی ہے۔ آپکا میری رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں، لیکن رائے کے اظہار کیلئے شائستہ زبان، اعلیٰ کردار اور باوضو ہونا ضروری ہے!۔ p: